عالمی مارکیٹ میں تیل کی قیمتوں میں کمی کے بعد حکومت نے پیٹرول سستا کرنے کی خوشخبری سنا دی

اسلام آباد (پی این آئی) حکومت نے پٹرولیم مصنوعات سستی کرنے کا عندیہ دے دیا، وزیر مملکت برائے خزانہ عائشہ غوث کے مطابق پورا احساس ہے کہ لوگ پٹرولیم مصنوعات کی قیمتیں بڑھنے سے پریشان ہیں،عوام کو ہر ممکن حد تک ریلیف دیا جائے گا۔ تفصیلات کے مطابق ملک میں پٹرولیم مصنوعات سستی ہونے کا امکان ظاہر کیا جا رہا ہے۔

 

ڈالر کی قدر میں حالیہ واضح کمی اور عالمی مارکیٹ میں تیل کی قیمتوں میں مسلسل کمی کی وجہ سے ملک میں پٹرولیم مصنوعات کی قیمتیں کم ہونے کا امکان ہے۔ذرائع کے حوالے سے بتایا گیا ہے کہ وفاقی حکومت نے اس حوالے سے اصولی فیصلہ بھی کر لیا ہے۔ پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں کمی کے حوالے سے وزیر مملکت برائے خزانہ عائشہ غوث کی جانب سے کہا گیا ہے کہ پورا احساس ہے کہ لوگ پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتیں بڑھنے سے پریشان ہیں،عوام کو ہر ممکن حد تک ریلیف دیا جائے گا۔تیل کی عالمی قیمتوں میں متواتر کمی کا عوام کو اصل ریلیف ملے گا، عالمی قیمتوں میں اتار چڑھاوٴ سے اوسط قیمت نکالنا پڑے گی۔دوسری جانب میڈیا رپورٹس کے مطابق پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں ہر ہفتے ردوبدل کی تجویز زیر غور ہے، اس حوالے سے حتمی فیصلہ وفاقی کابینہ کرے گی۔ اقدام کا مقصد عالمی سطح پر قیمتوں میں کمی کا فائدہ عوام کو منتقل کرنا ہے۔ اس حوالے سے بتایا گیا ہے کہ ڈالر کے اتار چڑھاؤ کے ساتھ پٹرولیم مصنوعات کی قیمتیں منسلک کرنے کا فیصلہ کیا گیا جس کے بعد موسم کی طرح پٹرولیم مصنوعات کی قیمتیں ہر ایک یا دو روز بعد تبدیل ہوں گی۔

 

ذرائع پٹرولیم ڈویژن کے مطابق ڈالر سستا یا مہنگا ہونے کی صورت میں ایک دو روز بعد پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں ردوبدل کیا جائے گا۔ پٹرولیم مصنوعات کی قیمتیں کم یا بڑھنے کا 15 روزہ طریقہ کار ختم کر دیا جائے گا۔پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں تبدیلی کا مکینزم اسی ہفتے فائنل ہو گا۔ نئے مکینزم کے مطابق ڈالر کی قیمت اوپر جانے پر 15 روز کا انتظار نہیں کیا جائے گا۔یہ فیصلہ پٹرولیم تقسیم کار کمپنیوں کے مطالبے پر کیا گیا۔ پمپ مالکان فیصلے پر نئی قیمت لاگو کرنے کے مجاذ ہوں گے۔