پاکستانی نژاد برطانوی نابینا لڑکی شیریں جہانگیر کا دل سوز گیت، حاضرین کے آنسو بہہ نکلے


لندن(پی این آئی)پاکستانی نژاد برطانوی نابینا لڑکی شیریں جہانگیر کا دل سوز گیت، حاضرین کے آنسو بہہ نکلے۔پاکستانی نژاد برطانوی نابینا لڑکی شیریں جہانگیر نے بریٹن گاٹ ٹیلنٹ پروگرام میں ایسا دل سوز گیت گایا کہ حاضرین کی آنکھوں سے آنسو بہہ نکلے۔ شیریں جہانگیر کے گانے پر جج ایمنڈا ہولڈن بھی آنسوؤں پر

قابو نہ رکھ سکیں، شیریں کا کہنا تھا کہ اب میوزک ہی اُس کا وژن ہے۔ شیریں جہانگیر کا تعلق لندن سے ہے، چودہ برس کی شیریں جب 5 برس کی تھی تو بینائی کمزور ہونا شرو ع ہوگئی تھی اور 9 برس کی عمر میں وہ بالکل نابینا ہوگئی تھیں۔بچی نے جج سائمن کوول اور دیگر ججز کو بتایا کہ ایک وقت تھا کہ وہ بھی دنیا کو دیکھ سکتی تھی مگر اب ایسا نہیں، میوزک ہی اس کا وژن ہے اور یہی وہ چیز ہے جس سے اسے محبت ہے۔شیریں جہانگیر نے پیانو پر میوزک کی دھنیں بکھیریں اور گیت پیش کیا تو نہ صرف شرکا بلکہ جج ایمنڈا ہولڈن بھی اپنے جذبات پر قابو نہ رکھ سکیں اور آبدیدہ ہوگئیں۔ڈیوڈ ویلیمز نے شیریں کو شاباش دی اور کہا کہ جو تم دیکھ نہیں سکتیں وہ یہ ہے کہ پورا ہال تمھیں کھڑے ہو کر داد دے رہا ہے۔جج ایلیشا ڈکسن نے کہا کہ گیت نے ان کا دل موم کردیا ہے۔ایمنڈا ہولڈن نے برٹش پاکستانی گلوکارہ کی تعریف کی اور کہا کہ خوبصورت بچی کو دیکھ کر انہیں ایسا محسوس ہوتا ہے جیسے بچی سے روشنی پھوٹ رہی ہو۔شیریں کے دادا اور وزیراعظم عمران خان کے دوست صاحبزادہ جہانگیر نے کہا کہ بچی کی کامیابی اس بات کا اظہار ہے کہ خدا ہر انسان کو کسی نہ کسی صلاحیت سے مالامال کرتاہے۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔



اس وقت سب سے زیادہ پڑھی جانے والی خبریں